13 C
Lahore
Friday, February 23, 2024

Book Store

منفرد پنڈت

منفرد پنڈت

(ہندی کہانی)

چندر نگر میں ایک عالم ہوا کرتا تھا۔ وہ کہتے تھے کہ تعلیم سے بڑی کوئی دولت نہیں۔ ہر جگہ ودیاوان کی پوجا کی جاتی ہے۔ پنڈت جی کے تین بیٹے تھے۔
تینوں نے صحیفوں کا تندہی سے مطالعہ کیا۔ بڑا بیٹا آیوروید کا بڑا اسکالر بن گیا، جبکہ دوسرا الہیات کا عالم اور تیسرا اخلاقیات کا عالم بن گیا۔
تینوں نے ایک ایک کتاب لکھی۔ ہر کتاب میں ایک لاکھ شلوک تھے۔
چندر نگر کے بادشاہ پنڈتوں کی بہت عزت کرتے تھے۔ ایک دن تینوں پنڈت اپنی کتابیں لے کر دربار پہنچے۔
بادشاہ نے اس کے ہاتھ میں بڑی کتابیں دیکھی تو بہت خوش ہوا۔ اس  نے پوچھا تم  نے ان صحیفوں میں کتنےشلوک لکھے ہیں؟
تینوں نے کہا، ایک ایک لاکھ۔
بادشاہ نے کہا، میں کام میں اتنا مصروف ہوں کہ تمام کو سننا یا پڑھنا ناممکن ہے۔ میں چاہتا ہوں کہ آپ تینوں اپنی کتاب کا خلاصہ، ایک ایک شلوک مجھے سنائیں۔
سب سے پہلے، آیوروید کے پنڈت نے کہا۔
آیوروید میں صحت مند رہنے کا ایک آسان طریقہ بتایا گیا ہے – جیرنا بھوجن مانیہ۔ یعنی پہلا کھانا ہضم ہونے کے بعد دوسرا کھانا کھایا جائے، تب ہی صحت مند رہ سکتا ہے۔
الہیات کے عالم نے کہا۔
کپال: پراننم دیا. یعنی حکیموں کا کہنا ہے کہ رحمت کے سوا کوئی مذہب نہیں۔
اخلاقیات کے پنڈت نے کہا
شکراچاریہ کہتے ہیں – برائی کے ساتھ کبھی صحبت نہ کرو۔ نیک لوگوں کا ستسنگ ہی فلاح کی طرف لے جاتا ہے۔
تینوں پنڈتوں سے صحیفے کا نچوڑ سن کر بادشاہ دنگ رہ گیا۔ انہیں انعام میں ایک لاکھ سونے کے سکوں سے نوازا گیا۔

۞۞۞۞۞۞۞

 

Related Articles

Stay Connected

2,000FansLike
2,000FollowersFollow
2,000SubscribersSubscribe
گوشۂ خاصspot_img

Latest Articles

Ads Blocker Image Powered by Code Help Pro

Ads Blocker Detected!!!

We have detected that you are using extensions to block ads. Please support us by disabling these ads blocker.

Powered By
100% Free SEO Tools - Tool Kits PRO